NohayOnline

Providing writeups (english & urdu) of urdu nohay, new & old


Ay mere beta mere

Nohakhan: Mir Rehan Abbas
Shayar: Yasir Raza


ay mere beta mere pyare ali asghar
noore nazar maa ke dulare ali asghar

gham teri furqat ka mujhe kha gaya beta
tere bina maa ka teri jee nahi lagta
aao ye maa tumko pukare ali asghar
ay mere beta...

roti hui bano e muztar ye pukari
chain hua khatm gayi raunaqein saari
jab se tum is ghar se sidhaare ali asghar
ay mere beta...

tu hi bata kiske mai ab naaz uthaun
jhoola jhulaun kise lori sunaun
ab mai jiyun kiske sahare ali asghar
ay mere beta...

dil may tha armaan ke tu dulha banega
laal mere sar pe tere sehra sajega
reh jaye armaan wo saare ali asghar
ay mere beta...

roti rahi na suni faryad kisi ne
teri behan pyari sakina ko shaqi ne
haye tamache bhi hai maare ali asghar
ay mere beta...

aake zara dekh ay ghazi ke bhatije
le gaye chadar bhi sitamgar mere sar se
jal gaye qaime bhi hamare ali asghar
ay mere beta...

fakhr hai mujhko mai hoo shabbir ka zakir
ab koi dunya ka mujhe darr nahi yasir
aap hai jab mere sahare ali asghar
ay mere beta...

اے میرے بیٹا میرے پیارے علی اصغر
نور نظر ماں کے دلارے علی اصغر

غم تیری فرقت کا مجھے کھا گیا بیٹا
تیرے بنا ماں کا تیری جی نہیں لگتا
آؤ یہ ماں تم کو پکارے علی اصغر
اے میرے بیٹا۔۔۔

روتی ہوی بانوے مضطر یہ پکاری
چین ہوا ختم گیء رونقیں ساری
جب سے تم اس گھر سے سدھارے علی اصغر
اے میرے بیٹا۔۔۔

تو ہی بتا کس کے میں اب ناز اٹھاؤں
جھولا جھٹلاؤں کسے لوری سناؤں
اب میں جیوں کس کے سہارے علی اصغر
اے میرے بیٹا۔۔۔

دل میں تھا ارمان کہ تو دولہا بنے گا
لال میرے سر پہ تیرے سہرا سجے گا
رہ جائے ارمان وہ سارے علی اصغر
اے میرے بیٹا۔۔۔

روتی رہی نہ سنی فریاد کسی نے
تیری بہن پیاری سکینہ کو شقی نے
ہاے طمانچے بھی ہیں مارے علی اصغر
اے میرے بیٹا۔۔۔

آکے زرا دیکھ اے غازی کے بھتیجے
لے گےء چادر بھی ستمگر میرے سر سے
جل گےء خیمے بھی ہمارے علی اصغر
اے میرے بیٹا۔۔۔

فخر ہے مجھکو میں ہوں شبیر کا ذاکر
اب کوئی دنیا کا مجھے ڈر نہیں یاسر
آپ ہیں جب میرے سہارے علی اصغر
اے میرے بیٹا۔۔۔