قافلہ جب وطن لوٹ آیا
آ کے بابِ مدینہ پہ ٹھہرا
گرد اُجڑے ہوئے قافلے کے
پُرسہ داروں نے حلقہ بنایا
شورِ ماتم اُٹھا شورِ گریہ اُٹھا
اے مدینہ غضب ہو گیا
بی بی کلثوم کا تھا یہ نوحہ
اے مدینہ غضب ہو گیا

شہرِ نانا کے لا تقبَلینا
اے مدینہ۔۔۔

شہر نانا کے ہم آئے اُجڑے ہوئے
خیر مقدم کے قابل کہاں ہم رہے
شہر نانا کے لا تقبَلین
اے مدینہ غضب ہو گیا
بی بی کلثوم ۔۔۔۔۔
اے مدینہ ۔۔۔

ہائے نانا بھرا گھر کا گھر لُٹ گیا
چادریں لُٹ گئیں مال و زر لُٹ گیا
تھا محرم کا کیسا مہینہ
اے مدینہ غضب ہو گیا
بی بی کلثوم ۔۔۔۔۔
اے مدینہ۔۔۔

چومتے تھے جسے آپ نانا صدا
تیراں ضربوں سے کاٹا گیا وہ گلا
شمر کے دل میں تھا کتنا کینہ
اے مدینہ غضب ہو گیا
بی بی کلثوم ۔۔۔۔۔
اے مدینہ۔۔۔

بھائی اٹھارہ تھے کوئی بھی نہ رہا
چھ مہینے کا اصغر بھی مارا گیا
لُٹ گیا سب ہمارا خزینہ
اے مدینہ غضب ہو گیا
بی بی کلثوم ۔۔۔۔۔
اے مدینہ۔۔۔

عصرِ عاشور نیزوں پہ سر آ گیا
اے شامِ غریباں تو خیمے جلے
سر پہ چادر کسی کی بچی نہ
اے مدینہ غضب ہو گیا
بی بی کلثوم ۔۔۔۔۔
اے مدینہ۔۔۔

بے ردا ہم کو در در پھرایا گیا
ظلم ہے کوچہ کوچہ سجایا گیا
بارشیں پتھروں کی رُکی نہ
اے مدینہ غضب ہو گیا
بی بی کلثوم ۔۔۔۔۔
اے مدینہ۔۔۔

ہائے اماں گلے سے لگا لو ہمیں
اپنے مرقد میں لِلہّ چھُپا لو ہمیں
اس قدر پہلے پیدل چلی نہ
اے مدینہ غضب ہو گیا
بی بی کلثوم ۔۔۔۔۔
اے مدینہ۔۔۔

ہو گیا حشر ریحان و سرور بپا
روکے شہزادیوں نے یہ جس دم کہا
ساتھ آئی نہ بالی سکینہ
اے مدینہ غضب ہو گیا
بی بی کلثوم ۔۔۔۔۔
اے مدینہ۔۔۔


khaafila jab watan laut aaya  
aake baabe madina pe tehra
gird ujde huwe khaafile ke
pursadaron ne halqa banaya
shor e matam utha shor e giriya utha
ay madina ghazab hogaya
bibi kulsoom ka tha ye noha
ay madina ghazab hogaya

shehr nana ke la taqbalina
ay madina....

shehr nana ke hum aaye ujde huwe
khair maqdam ke khaabil kahan hum rahe
shehr nana ke la taqbalina
ay madina ghazab hogaya
bibi kulsoom...
ay madina...

haye nana bhara ghar ka ghar lutgaya
chadare lutgayi maal o zar lutgaya
tha moharram ka kaisa mahina
ay madina ghazab hogaya
bibi kulsoom...
ay madina...

choomte thay jise aap nana sada
tera zarbo se kaata gaya wo gala
shimr ke dil may tha kitna geenah
ay madina ghazab hogaya
bibi kulsoom...
ay madina...

bhai athara thay koi bhi na raha
cheh mahine ka asghar bhi maara gaya
lutgaya sab hamara khazeena
ay madina ghazab hogay
bibi kulsoom...
ay madina...

asre ashoor naizo pe sar aagaye
aayi sham e ghareeban to qaime jalay
sar pe chaadar kisi ki bachi na
ay madina ghazab hogaya
bibi kulsoom...
ay madina...

be-rida humko dar dar phiraya gaya
zulm hai koocha koocha sajaya gaya
baarishay patharon ki ruki na
ay madina ghazab hogaya
bibi kulsoom...
ay madina...

haye amma galay se lagalo hamay
apne marqad may lillah chupalo hamay
is qadar pehle paidal chali na
ay madina ghazab hogaya
bibi kulsoom...
ay madina...

hogaya hashr rehaan o sarwar bapa
roke shehzadiyo ne ye jis dam kaha
saath aayi na bali sakina
ay madina ghazab hogaya
bibi kulsoom...
ay madina...
Noha - Ay Madina Ghazab
Shayar: Rehaan Azmi
Nohaqan: Nadeem Sarwar
Download Mp3
Listen Online